top of page

مغربی دنیا اپنی شرمناک تاریخ سے روبرو ہو رہی ہے:تُرک صدر ایردوان

صدر رجب طیب ایردوان نے کہا ہے کہ یورپ سے کینیڈا تک پھِلے رقبے سے ہر موقع پر ہمیں حوقو انسانی ،جمہوریت اور آزادی کی نصیحت کرنے والوں کے تاریخی مظالم سننے اور دیکھنے کو مل رہے ہیں۔


صدر رجب طیب ایردوان نے کہا ہے کہ یورپ سے کینیڈا تک پھِلے رقبے سے ہر موقع پر ہمیں حوقو انسانی ،جمہوریت اور آزادی کی نصیحت کرنے والوں کے تاریخی مظالم سننے اور دیکھنے کو مل رہے ہیں۔


ایردوان صدر نے اس بات کا اظہار انقرہ میں منعقدہ ترک نوجوانوں کے اجلاس سے خطاب کے دوران سربرینتسا نسل کشی کی 26 ویں یاد کے موقع پر کیا ۔




انہوں نے کہا کہ گزشتہ روز سربرینتسا نسل کشی کی 26 ویں برسی منائی گئی اور میں تمام شہدا کے لیے دعائے مغفرت کرتاہوں۔


انہوں نے کہا کہ یورپ کے عین وسط میں اقوام متحدہ کی آنکھوں کے سامنے ہوا یہ انسانی قتل عام تاریخی صفحات پر ایک سیاہ داغ بن کر محفوظ ہو چکا ہے،اس قتل عام میں 8372 بوسنیائی قتل ہوئے جن پر ہمارا دل خون کے آنسو روتا ہے۔ ہر اجتماعی قبر سے تاحال متعدد شہدا کی باقیات بازیاب ہو رہی ہیں جن پر ڈھائے گئے مظالم فراموش نہیں کیے جا سکتے ۔


صدر نے مزید کہا کہ اس قسم کے المناک واقعات کو دوبارہ نہ دہرانے اور مغربی دنیا کو اس نسل کشی کی حقیقت سے آشکار کروانے کےلیے ہم سے جو بن پڑے گا وہ کریں گے۔ہمیں یورپ سے کینیڈا تک کے رقے پر پھیلی دنیا ،حقوق انسانی،ڈیموکریسی اور آزادی کی نصیحتیں کرنے والے اپنی شرمناک تاریخ سے روبرو ہو رہے ہیں۔

345 views0 comments

Related Posts

See All

Kommentarer

Betygsatt till 0 av 5 stjärnor.
Inga omdömen ännu

Lägg till ett betyg
bottom of page